الیکٹرانک کرنسیز کی دنیا میں خوش آمدید!!!

یہاں ہم ان سامعین کے لیے جو بلاک چین رقم کے نام سے آشنا نہیں ،درست معلومات فراہم کرنے کی کوشش کرتے ہیں ۔

دیجیٹل رقم کیا ہے؟

کاروباروں کی نا قابل تبّدل ضرورت مالی دستاویز ہے۔آپ ایسی پیداوار کی قیمت ادا کرتے ہیں جو آپ خریدتے ہیں یا بیچتے ہیں یاکسی خریدار سے حاصل کرتے ہیں۔

روایتی کاروباروں میں،یہ کام بینک نوٹس ، چیک اور بینک ٹرانسفر، بینک کارڈز کی مدد سے کیا جاتا ہے۔

عام روایتی رقم اور کرنسی، جیسے کہ ڈالر، یورو، سوئس فرانک، مختلف ممالک کی حکومتوں اور مرکزی بینکوں کی جانب سے پیدا کیے جاتے ہیں اور ان کا انتظام کیا جاتا ہے۔

درحقیقت، ایک مرکزی کنٹرولنگ کرنے والا ادارہ موجود ہوتا ہے جو کہ رقم کی معاونت کرتاہے اور اسکے انتقال کی نگرانی کرتا ہے۔

بینکس اور مالی ادارے مالی ٹرانزیکشنز کو زیادہ قابلِ پہنچ بنانے کے لیے ذرائع مہیا کرتے ہیں اور مرکزی بینک ان کی کارکردگی کی نگرانی کرتے ہیں۔

آپ اپنی ملکیت کو اپنے بینک اکاؤنٹ، والٹ یا سیف بکس میں رکھتے ہیں۔

 

ان طریقوں کے مسائل کیا ہیں؟

ٹرانسفرز ایک مرکزی ادارے کی نگرانی میں عمل میں آتے ہیں۔ اور بعض دفعہ فنڈز ٹرانسفر میں کئی دن لگ جاتے ہیں۔عمومی طور پر ٹرانسفر فیس زیادہ ہوتی ہے۔

اب ڈیجیٹل دنیا میں، ایک بنیادی تبدیلی آئی ہے۔

بنیادی تصور یہ ہے کہ کیا کسی ٹرانزیکشن کے دو اطراف کے درمیان فنڈز ٹرانسفر کسی مرکزی ادارے کی نگرانی کے بغیر بھی ممکن ہے؟کیا کم وقت میں فنڈز ٹرانسفر کرنا ممکن ہے؟ اور کیا مواصلات کے خرچ کو کم کرنے کا کوئی راستہ ہے؟

جواب ہے کہ ہاں، کرپٹوکرنسی کی مدد سے ،یہ ممکن ہے۔

 

اب کرپٹوکرنسی کیا ہے؟

بہت سے لوگ Bitcoin سے آشنا ہیں۔ وہ کرنسی جس نے نہایت تیزی سے اپنی قدر کئی گنا کر لی اور بہت شور شرابے کی باعث بنی۔Bitcoin خفیہ انداز سے کام کرنی والی پہلی کرنسی نہیں ہے۔

Bitcoin مالی ٹرانسفرز کا ایک ایسا غیر مرکزی منقسم مینجمنٹ کا طریقہ متعارف کروانے میں کامیاب رہا ہے جو کہ حکومتوں اور کرنسیز سے مکمل طور پر آزاد ہے۔

Bitcoin کے بعد دوسری کرپٹوگرافک کرنسیز بھی تھیں جن کے اپنے تصورات تھے اور جنہوں نے اصلاحات کیں۔

 

کرپٹوگرافی کس طرح کام کرتی ہے؟

اگر آپ نے کوئی ڈیل کسی دور دراز ملک میں کی ہے اور اس بات کا تیقّن کرتے ہوئے کہ تصدیقی ریفرنس بھی قابلِ انتقال ہے ،تیزی سے آپ اس کی قیمت ادا کرنا چاہتے ہیں تو کرپٹوگرافک کرنسی کو استعمال کرنا بہترین حل ہے۔

 

آپ کو اس سے خریدار کا ایڈریس درکار ہوتا ہے:

 

آپ کو بیچنے والے کا ایڈریس یا QR موصول ہوجائیگااور اپنے والٹ سے موصول کنندہ کو رقم منتقل کر سکتے ہیں

 

محض کچھ منٹوں کے بعد، رقم موصو ل کنندہ کے والٹ میں موجود ہوگی۔

 

 

 

 

کیا یہ بات رازداری کے خلاف نہیں؟

 

ہر کسی کو انوینٹری اکاؤنٹس کا علم کیسے ہو سکتا ہے؟

اس تشویش کو دور کرنے کے لیے، ہمیں اس نیٹ ورک کے متعلق مزید کچھ معلومات کی ضرورت ہے۔

مثال کے طور پر میرے والٹ میں 100 counos coins موجود ہیں ۔ میں ایک ایسی فروخت کرنا چاہتا ہوں کہ جس میں خریداربھی counos coins قبول کر تا ہو۔

میں پر اتفاق ٹرانزیکشن ٹائپ پر خریدار کا ایڈریس حاصل کروں گا۔اگر میں خریدار کو اس خرید کے لیے 30 counos coins بھیجنا چاہتا ہوں تو ٹرانزیکشن اس انداز میں رجسٹر ہوگی ۔

خریدار (ایڈریس :xxxxxx ) پہلا بیلنس 100 CSC

خریدار(ایڈریس: xxxxxx ) خرید کا خرچ -30 CSC (دیبٹ)

فروخت کنندہ(ایڈریس: xxxxxx ) خرید کا خرچ +30 CSC (کریڈٹ)

یہ فرضی اور یقینی طور پر مختصر مالی ریکارڈ زگاہک کا والٹ تیار بناتے ہیں۔ اور اس کو نیٹ ورک پر بھیج دیتے ہیں ۔

نیٹ ورک پر کچھ servers موجود ہوتے ہیں جو miners کہلاتے ہیں۔Miners اس معلومات سے اور بلاک کی پچھلی معلومات سے کچھ ٹرانزیکشنز بناتے ہیں جو کہ انتہائی پر ٍتصنع کرپٹوگرافک algorithms پر مبنی ہوتی ہیں اور اس طرح ایک نیا بلاک تیار ہوتا ہے۔

بلاک تیار کرنے کے لیے کئی کنٹرولز ہوتے ہیں۔

مثلاً ایک ایسی ٹرانزیکشن نئے بلاک میں داخل کی جاتی ہے جو کہ پچھلے کسی بھی بلاک میں موجود نہ ہو( اس طرح ایک ٹرانزیکشن دو بار ریکارڈ نہیں)

بھیجنے والے کے پاس ٹرانزیکشن کی رقم موجود ہوتی ہے۔

 

 

 

 

جب ایک miner کی جانب سے ایک بلاک بنا لیا جاتا ہے تو وہ نیٹ ورک پر بھیج دیا جاتا ہے۔اور ٹرانسفر کے بعد فنڈز کو حتمی صورت دے دی جاتی ہے۔

اس صورت میں مالی ٹرانزیکشنز کی مکمل تاریخ نیٹ ورک پر دستیاب ہوتی ہے۔لیکن جو شے رکھی جاتی ہے وہ بھیجنے والے اور وصول کرنے والے کے ایڈریسز ، اور بھیجی جانے والی رقم اور اسکی وضاحت ہوتی ہے۔

اس صورت میں، اگرچہ سب لوگوں کو علم ہوتا ہے کہ کوئی ایڈریس کس قدر دستیاب ہے اور انہوں نے کیا ٹرانزیکشنز کی ہیں ، لیکن اس بات کی کوئی صورت نہیں کہ کوئی یہ شناخت کر سکے کہ پوشیدہ کرنسی میں کوئی خاص والٹ ایڈریس کس کی ملکیت ہے۔ صرف مالک ہی یہ بات جانتا ہے کہ اسکی اسپیچ کیا ہے۔

Miners کو یہ کام کرنے کا ریوارڈ دیا جاتا ہےجو کہ مالی ٹرانزیکشنز کی ایک قابلِ اعتماد اور مسلسل بلاکنگ چین بنا کر تمام عمل میں لائی گئی ٹرانزیکشنز کی نگرانی کرتے ہیں۔

یہ بونس اس وقت miner پر صرف کیا جا سکتا ہے جب نیٹ ورک پر بنائے گئے بلاک کے بعد کم از کم 100 بلاکس اور بنائے گئے ہوں۔

چونکہ miners کی تعداد زیادہ ہوتی ہے، مقابلہ پہلے بلاک کے لیے ہوتا ہے۔یہ، یقینی طور پر، نیٹ ورک کی سیکورٹی بنانے میں مدد کرتا ہے۔بعد کی تحریروں میں ہم mine کرنے ،ریوارڈ دینے اور اسکو صرف کرنے کے طریقے کی مزید وضاحت کریں گے۔